Arshad Sharif Shaheed's daughter entered journalism 73

ارشد شریف شہید کی بیٹی صحافت میں آگئیں

سٹاف رپورٹ (تازہ اخبار ،پی این پی نیوز ایچ ڈی)
گزشتہ سال کینیا میں قتل ہونیوالے معروف صحافی ارشد شریف کی بیٹی علیزہ ارشد اپنے والد کے نقش قدم پر چلتے ہوئے صحافت کے میدان میں اتر آئی ہیں اور اپنی شناخت بنانے کے لیے تیار ہیں.میڈیا اور معاشرے پر اس کے اثرات کا مشاہدہ کرتے ہوئے اور تحقیقاتی رپورٹنگ کے لیے اپنے والد کے جذبے اور سچائی سے پردہ اٹھانے کے عزم سے متاثر ہو کر علیزہ نے اس پیشے میں قدم رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ارشد شریف کی بیٹی کی جانب سے صحافت کو بطور پیشہ منتخب کرنے کے اس فیصلے نے صحافی برادری اور ان کے والد کے چاہنے والوں میں توجہ اور تجسس بیدار کیا ہے۔ بہت سے لوگ علیزہ کی ترقی کا مشاہدہ کرنے اور یہ دیکھنے کے لیے بے چین ہیں کہ وہ صحافت کے دائرے میں اپنی منفرد داستان کو کس طرح تشکیل دے گی.پی ٹی آئی رہنما شہباز گل نے ٹوئٹر پر علیزہ ارشد کی رپورٹ شیئر کرتے ہوئے انہیں خوب داد دی اور ان کے والد کو یاد کرتے ہوئے نیک خواہشات کا اظہار کیا.سوشل میڈیا صارفین نے بھی علیزہ ارشد کو سراہتے ہوئے ان کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں