سرائیکی خطے کے عظیم شاعر شاکر شجاعبادی ایک عرصے سے علیل ومعذور ہیں ان کیلئے سرکاری اور نجی سطح پر امداد کا مناسب سلسلہ چلتا رہتا ہے 212

سرائیکی خطے کے عظیم شاعر شاکر شجاعبادی ایک عرصے سے علیل ومعذور ہیں ان کیلئے سرکاری اور نجی سطح پر امداد کا مناسب سلسلہ چلتا رہتا ہے

(سٹاف رپورٹ،تازہ اخبار،پاک نیوز پوائنٹ )

اب بھی مخیر حضرات اور حکومت پنجاب مکمل رابطے میں ہیں مگر ان کی اولاد ہی شاید اُن سے مخلص نہیں اور ہر امداد کو پتہ نہیں عمرو عیار کی کس زنبیل میں ڈال کر پھر سے معصوم و مسکین بن کر اپنے والد کے ساتھ کھڑے ہوجاتے ہیں اتنے عظیم شاعر کے تقدس کی یہ بے حرمتی دل کو بہت تکلیف دیتی ہے ۔حکومت وقت اور مخیر حضرات جناب شاکر شجاعبادی کے علاج کیلئے کسی تیسرے شخص، کمیٹی یا ہسپتال انتظامیہ کو مقرر کرے اور ان کے بیٹے کو ایک ٹکا نہ دیا جائے ورنہ یہ بندہ خود تو عیاشی کرتا ہی ہے ہمارے اس قومی ورثے کو بھی اسی طرح بھکاری بنا کر رکھے گا.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں