ملک میں الیکٹرانک ووٹ کا دعویٰ کرنے والی پارٹی کے اندر اپنی ممبر شپ میں ہی گھپلے سعودی عرب میں انٹرا پارٹی الیکشن میں بڑی بے ضابطگیاں سامنے آ گی 213

ملک میں الیکٹرانک ووٹ کا دعویٰ کرنے والی پارٹی کے اندر اپنی ممبر شپ میں ہی گھپلے سعودی عرب میں انٹرا پارٹی الیکشن میں بڑی بے ضابطگیاں سامنے آ گی

(سٹاف رپورٹ،تازہ اخبار،پاک نیوز پوائنٹ )

سعودی عرب میں سیکرٹری آؤ آئی سی عبداللہ ریاڑ گروپ نے انٹرا پارٹی الیکشن جیتنے کے لئے 51 ممبران کی ممبر شپ فیس سعودی کمپنیوں کے اکاؤنٹ سے جمع کروائی جو کہ پارٹی الیکشن لاء میں غیر قانونی ہے.جن کی ممبر شپ دوبارہ بحال کرنے کے لیے کل شام تک کا ٹائم دے دیا گیاہے ایک ایم سی کی فیس 2700 ریال ہے. اور تمام افراد کا تعلق اتحاد ورکر پینل سے ہے اور عبداللہ ریاڑ کے منظور نظر ہیں.آن لائن سسٹم میں درجنوں جعلی ایم سی ووٹ رجسٹر کیے گیے جن کے سو پوائیٹ ہی نہیں مکمل اور انکو ایم سی بنا دیا گیا ہے جبکہ 90 پوائیٹ والے درجنوں لوگ وقت سے پہلے سسٹم بند ہونے کی وجہ سے ممبر شپ سے متاثر ہوئے ہیں اور اس پہلے ہی انصاف نظریاتی پینل الیکشن کا بائیکاٹ کر چکا ہے ان تمام بے ضابطگیوں کی وجہ سے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں